ہوم / انٹرویوز / خود کو ایک مکمل بیٹسمین سمجھتاہوں: شاداب خان

خود کو ایک مکمل بیٹسمین سمجھتاہوں: شاداب خان


پاکستان کرکٹ ٹیم کے نوجوان اسپنر شاداب خان نے پی ایس ایل 2017ء میں عمدہ کارکردگی دکھانے کے بعد اسی سال دورۂ ویسٹ انڈیز کیلئے ٹی ٹوئنٹی اسکواڈ میں جگہ پائی تھی جس میں وہ کارکردگی دکھائی ، جس نے خود اُسے بھی حیرت زدہ کردیاتھا۔

جس کے بعد وہ پاکستان ٹیم کا مستقل رکن بن گیاہے حتیٰ کہ حالیہ پی ایس ایل میں وہ دفاعی چیمپئن اسلام آبادیونائیٹڈ کی قیادت بھی کرتا دکھائی دیا۔وہ اب تک پاکستان کیلئے پانچ ٹیسٹ، 34ون ڈے اور 32 ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میچز کھیل چکا ہے ۔اُس نے ٹیسٹ اور ون ڈے فارمیٹ میں تین تین ففٹیاں اسکور کرکے خودکو قابل بھروسہ آل رائونڈر بھی ثابت کردیاہے ۔ٹیسٹ میچز میں 34سے زائد اور ون ڈے میچز میں اُس کی 30 کے لگ بھگ اوسط ظاہرکررہی ہے کہ نچلے نمبروں پر بیٹنگ کرنے والا شاداب خان مستقبل میں ٹیم کیلئے کئی کارہائے نمایاں سرانجام دے سکتاہے۔

پاکستانی ہیڈکوچ مکی آرتھر اور کپتان سرفرازاحمد کو شاداب خان کی صلاحیتوں پر پورا اعتماد ہے اورسلیکٹرز بھی اُسے محدود اوورزکے دونوں فارمیٹس میں فرسٹ چوائس لیگ اسپنر قرار دیتے ہیں۔اس ہفتے اس باصلاحیت کرکٹر سے کی گئی بات چیت ذیل میں پیش کی جارہی ہے۔

آپ نے گزشتہ سال دورۂ انگلینڈمیں تین ففٹیاں بنانے کی ہیڈکوچ مکی آرتھر سے شرط لگائی تھی اور اتنی ففٹیاں بنابھی لیں ۔شرط جیتنے پر مکی آرتھر سے کھانا کھایا یا نہیں ابھی تک؟

نہیں…اُس کے بعد روزے تھے اور ویسے بھی وہاں کھانا سستا ہی ملتا۔سوچا تھا دبئی میں جاکر اُن سے خرچا کرائوں گا۔

اچھا کیا آپ خودکو ایک مکمل بیٹسمین سمجھتے ہیں؟
ہاں جی…بالکل! آپ دیکھیں گے کہ آنے والے دنوں میں میری بیٹنگ کارکردگی میں نکھار آتا جائے گا۔

آپ نے اب تک سرفرازاحمد کے علاوہ برینڈن میکولم، مصباح الحق، ڈیوین براووکی قیادت میں کھیل چکے ہیں، ان میں سے کس کو بہترین کپتان سمجھتے ہیں؟
بلاشک وشبہ…مصباح الحق

کیوں؟
کیونکہ وہ بہت پرسکون رہتے ہیں اور کھلاڑی پر پریشر بالکل نہیں آنے دیتے۔جب میں مشکل وقت میں بھی بولنگ کرارہاہوتاتھا تو وہ میری حوصلہ افزائی کرتے دکھائی دیتے تھے۔اُن کی موجودگی میں ہم پر خصوصاً نئے کھلاڑیوں پر بالکل دبائو نہیں آتاتھا۔

سرفرازتو بہت چیختے ہیں ناں…
(مسکراتے ہوئے)نہیں…یہ اُن کا انداز ہے اور یقینا ہر کھلاڑی اور کپتان کا الگ الگ انداز ہوتاہے ۔وہ گرائونڈمیں مختلف دکھائی دیتے ہیں لیکن میدان سے باہر وہ بہت اچھے ہیں ۔

مصباح الحق اور سرفرازاحمد میں سے کس نے آپ کو زیادہ ڈانٹا…؟
نہیں …مجھے اب تک ویسی ڈانٹ نہیں پڑی جس کی جانب آپ کا اشارہ ہے۔ہاں البتہ کوئی گیند خراب ہوجائے تو کپتان بتادیتاہے کہ مجھ سے یہ غلطی ہوئی ہے اور اسے دوبارہ نہ کروں۔

بیٹسمین کو کونسی گیند زیادہ کرانے کی کوشش کرتے ہیں؟
جب کوئی بیٹسمین نیانیا کریزپر آتاہے تو اُسے گگلی کرانے کی کوشش کرتاہوں اور ویسے میں اکثر اوقات رنزروکنے کے بجائے وکٹ لینے کے بارے میں ہی سوچتا رہتاہوں اور اسی حکمت عملی کے تحت بولنگ کراتاہوں۔

سُناہے کہ آپ نے کہاتھا کہ میں خودکو شین وارن جیسا سمجھتاہوں ۔ایسا واقعی کہاتھا؟
پتہ نہیں…آپ کو یہ باتیں کون بتاتاہے، میں نے تو ایسا کبھی نہیں کہا۔

اچھا! آپ شین وارن کے فین ہیں؟
بالکل نہیں…
اچھا اگر آپ کو قدرت ان میں سے ایک کارکردگی کا انتخاب کرنے کا کہے تو کسے منتخب کریں گے، اننگز میں پانچ وکٹیں یا سنچری؟

اننگزمیں پانچ وکٹیں

کیا آپ کو اوپری نمبروں پر بیٹنگ کرنے کی خواہش ہے؟
ہاں …بالکل ہے۔اصل میں،مجھے بیٹنگ کرنا بہت پسند ہے،چاہے وہ کسی بھی نمبرپرہو۔اوپری نمبروں پر طویل اننگزکھیلنے کا موقع ہوتا ہے اور پریشر بھی نسبتاً کم ہوتاہے۔

آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کے فائنل میں ویرات کوہلی کا کیچ تھام کر کیا محسوس کیا؟
اُس سے پچھلی گیندپر اظہرعلی کیچ ڈراپ کرچکاتھا اور مجھ سے ڈراپ ہونے لگاتھا کیونکہ وہ ایج لگاتھا اور مجھے گیند نظر نہیں آیاتھا حتیٰ کہ گیند جب بہت ہی قریب آیاتو نظر آیا۔بس !اللہ تعالی نے وہ کیچ پکڑا دیا۔میں تو خود حیران تھا کہ یہ کیچ کیسے ہوگیا۔

میں نے کیچ ڈراپ کرنے کے بعد اظہرعلی کو حوصلہ دیاتھا کہ کوئی بات نہیں لیکن دل ہی دل میں سوچ رہاتھا کہ یہ کیا کردیا۔جیسا یہ بیٹسمین ہے اور جیسی پچ ہے، کہیں یہ میچ ہی نہ لے جائے۔

سنا ہے آپ کی فہیم اشرف اور حسن علی سے کافی بنتی ہے؟
ہاں !…لیکن جب ہم ساتھ ہوتے ہیں ایک کمرے میں تو آپس میں باتیں کم کرتے ہیں کیونکہ ان دونوں نے گانے لگائے ہوتے ہیں۔اُن کے لگائے ہوئے گانے سن سن کر کچھ گانے مجھے بھی یاد ہوگئے ہیں۔وہ پنجابی گانے زیادہ سنتے ہیں خاص طورپر ہنی سنگھ کے۔

اچھا!ان میں سے آپ کا فیورٹ کرکٹر کون ہے؟ … وسیم اکرم یا وقاریونس؟

وسیم اکرم
موجود ہ پاکستانی میں سب سے بڑی ’فلم‘ کونسا کھلاڑی ہے؟جسے کہتے ہیں ناں یار یہ بڑی فلم ہے…
فلم…(سوچتے ہوئے) امام الحق

ویسے اُسے کیوں فلم قرار دیاہے؟
یہ چھوڑیں ناں…بس جواب دے دیاہے، اتنا ہی کافی ہے آپ لوگوں کیلئے…

اگریہ تین کرکٹرزمیں سمندر میں ڈوب رہے ہوں اور آپ کو ان میں سے کسی ایک کو بچانے کا موقع ہو تو کس کو بچائیں گے…فہیم اشرف، حسن علی اور فخرزماں؟

کسی کو بھی نہیں بچائوں گا۔

کیوں بھئی؟
کیونکہ ان کو کس نے کہاتھا کہ گہرے سمندر میں جائو

نہیں …آپ نے کسی ایک کا بتاناہے؟
کس کو بچائوں…(کافی سوچتے ہوئے) میں فخرکو ہی بچائوں گا کہ وہ نیوی میں رہاہے،باقی دونوں کو وہ خودہی بچالے گا

دیگر اہم اسٹوریاں پڑھیں


Facebook Comments

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

شاداب خان کی بیماری اور اپنی سلیکشن پریاسرشاہ کا دلچسپ تبصرہ

پاکستان کرکٹ ٹیم کے لیگ اسپنر شاداب خان کے متبادل کے طورپر انگلینڈ کیخلاف پانچ …

error: Content is protected !!