ہوم / ٹاپ اسٹوریاں / پاک- بھارت ٹاکرا- کون کتنا بھاری؟

پاک- بھارت ٹاکرا- کون کتنا بھاری؟


پاکستان اور بھارت کے مابین ورلڈکپ 2019ء کا اہم ترین میچ آج مانچسٹرمیں کھیلا جائے گا جو ٹورنامنٹ کا سب سے ہائی وولٹیج میچ ہوگاجس میںدُنیائے کرکٹ کی سب سے بڑی روایتی حریف ٹیمیں مدمقابل آئیں گی۔

اس رپورٹ میں دونوں روایتی حریف ٹیموں کے اس ہائی وولٹیج میچ کا تجزیہ اور پریویو شامل کیا جارہاہے جس میں دونوں ٹیموں کے مابین کھیلے گئے حالیہ پانچ میچز، سابقہ ورلڈکپ میچز کے علاوہ انگلش سرزمین اور اس میچ کے وینیو مانچسٹر پر دونوں ٹیموں کے سابقہ میچز کے نتائج کا جائزہ بھی شامل ہے۔

آج کھیلا جانے والا میچ دونوں روایتی حریف ٹیموں کے مابین کھیلا جانے والا ساتواں ورلڈکپ میچ ہوگاجس میں پاکستان ٹیم اپنی پہلی فتح کی متلاشی ہوگی کیونکہ اس سے قبل ورلڈکپ 1992، 1996، 1999، 2003ء 2011ء اور 2015ء کے دوران کھیلے گئے تمام چھ میچز میں بھارتی ٹیم ہی فاتح رہی ہے جوکہ حیران کن اتفاق ہے کیونکہ ماضی میں پاکستان ٹیم بھارت سے کہیں بہتر اور مضبو ط ٹیم ہوا کرتی تھی مگر اس کے باوجودوہ کبھی روایتی ٹیم کے خلاف ورلڈکپ میچ نہیں جیت سکی۔ اُمیدہے کہ اس بار وہ سلسلہ روکنے میں کامیاب رہے گی۔

انگلش سرزمین پر دونوں ٹیموں کے سابقہ ریکارڈ پر نگاہ ڈالیں تو پاکستان او ربھارت کی ٹیمیں حالیہ میچ سے قبل انگلش سرزمین پر پانچ بار مدمقابل آئی ہیں جن میں بھارتی ٹیم کا پلڑا بھاری ہے جس نے تین کامیابیاں حاصل کی ہیں جبکہ اس کے بدلے پاکستان کو صرف دو کامیابیاںمل سکی ہیں جو 2004ء اور 2017ء کی چیمپئنز ٹرافی کے دوران حاصل کی تھیں۔

آج کے میچ کے وینیو مانچسٹر پر بھی بھارت کا ریکارڈ بہتر ہے ۔یہ دوسرا موقع ہوگا کہ پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں مانچسٹر کے اولڈٹریفورڈکے مقام پر مدمقابل آئیں گی۔اس سے قبل دونوں ٹیموں کے بعد واحدمیچ ورلڈکپ99ء کے دوران کھیلا گیا تھا جس میں بھارتی ٹیم نے فتح حاصل کی تھی۔

اگرچہ مجموعی اعدادوشمار میں پاکستان ٹیم کا پلڑا تاحال بھاری ہے مگر حالیہ میچ کے تناظر میں ہر اعتبار سے بھارتی ٹیم کو برتری حاصل ہے جس کا نہ صرف ورلڈکپ میچز،انگلینڈ اور اولڈٹریفورڈ میں نسبتاً ریکارڈبہترہے بلکہ 2015ء سے مجموعی ون ڈے انٹرنیشنل کرکٹ میں بھی وہ کہیں بہتر نتائج کی حامل ٹیم ہے۔

اس عرصے میں دونوں ٹیموں کے مابین کھیلے گئے گزشتہ پانچ میچز میں پاکستان ٹیم صرف ایک ہی کامیابی حاصل کرسکی ہے جو آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی 2017ء کے فائنل میں حاصل کی تھی جبکہ اس کے بدلے اُسے روایتی حریف کے ہاتھوں چار شکستوں کا سامناکرنا پڑاہے۔

دیگر اہم اسٹوریاں پڑھیں

پوائنٹس ٹیبل پر بڑی اکھاڑپچھاڑ-آسٹریلیا پہلے،پاکستان نویں نمبرپر


Facebook Comments

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

بابراعظم نے جاوید میانداد کا ورلڈکپ ریکارڈ توڑدیا

پاکستان کرکٹ ٹیم رن ریٹ میں معمولی فرق سے ورلڈکپ 2019ء سے باہر ہوگئی ہے …

error: Content is protected !!